’ہم نے سکاٹ لینڈ کی سنی اب انگلینڈ کی سنی جائے‘

سکاٹ لينڈ نے کل ہونے والے تاريخي ريفرينڈم ميں يونائيٹيڈ کنگڈم ميں ہي رہنے کا فيصلہ کيا ہے۔ ريفرينڈم ميں ساتھ رہنے کے حق ميں پچپن فيصد ـــ اور ‘ساتھ ‘نہ’ رہنے کے حق ميں پينتاليس فيصد ووٹ پڑے۔ تاريخي اعتبار سے انگلنڈ اور سکاٹ لينڈ کے درميان تعلقات ميں اب تک تين فيصلہ کن موڑآے ہيں۔ سات سو سال پہلے تيرہ سو چودہ ميں انگريز بادشاہ ايڈورڈ کو سکاٹ بادشاہ رابرٹ نے شکست دي۔ـ تين سو سال پہلے سکاٹ لينڈ کي انگلينڈ کے ساتھ يونين بني اور پھر تيسرا تاريخي موڑ کل کے ريفرينڈم کي شکل ميں آيا۔ حسین عسکری کی رپورٹ



Source link

Facebook Comments

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*